Daily "Layalpur Post"
 

فرح، عمران اور پی ٹی آئی رہنماؤں کے موقف میں تضاد: تجزیہ کار

روضہ رسولؐ کے سامنے اذیت ناک سیاسی مظاہرہ

فرح، عمران اور پی ٹی آئی کے موقف میں تضاد: تجزیہ کار

کراچی (ٹی وی رپورٹ)جیو کے پروگرام ’’رپورٹ کارڈ‘‘ میں میزبان علینہ فاروق شیخ کے پہلے سوال کیا عمران خان کی فرح کے حوالے سے وضاحت درست ہے؟ کا جواب دیتے ہوئے تجزیہ کاروں نے کہا کہ فرح خان کے حوالے سے عمران خان اور پی ٹی آئی رہنماؤں کے موقف میں تضاد نظر آرہا ہے،ایک دوسرے سوال پر تجزیہ کاروں نے کہاکہ شیخ رشید کااپنے قتل کا خدشہ سیاسی بیان ہے جو حکومت پر دباؤ ڈالنے کیلئے دیا گیا ہے، سہیل وڑائچ نے کہا کہ عمران خان کا کہنا درست ہے فرح خان کے خلاف انتقامی کارروائی کی جارہی ہے۔

فرح خان کے خلاف بغیر سوچے سمجھے کارروائی شروع کردی گئی ہے، نیب کو اس طرح کے کیسز نہیں لینے چاہئیں، نیب کا یہ وہی غلط پیٹرن ہے جو عمران خان کے زمانے میں تھا، فرح خان کی ساکھ جیسی بھی ہو ان کیخلاف کیس مضبوط نہیں ہے، فرح خان نے رشوت لی یا کرپشن کی ہے تو حکومت ثبوت لائے، صرف اثاثے بڑھنے کا معاملہ ایک بہانہ ہے، نیب کے ادارے کو ختم کر کے نیا آغاز کرنا چاہئے۔ریما عمر کا کہنا تھا کہ فرح خان کے حوالے سے عمران خان اور پی ٹی آئی رہنماؤں کے موقف میں تضاد نظر آرہا ہے۔

پی ٹی آئی خود کو فرح خان سے دور رکھ رہی ہے لیکن عمران خان ان کا دفاع کررہے ہیں، عمران خان اور ان کی بیگم کا فرح خان کے معاملہ سے براہ راست تعلق بن جاتا ہے، فرح خان کا کیس نیب کو بھیجنے پر مجھے تحفظات ہیں، فرح خان کا معاملہ ایف بی آر دیکھ سکتا ہے۔ اطہر کاظمی نے کہا کہ فرح خان کے تمام اثاثے ظاہر شدہ ہیں انہوں نے کچھ نہیں چھپایا، فرح خان کا نام لے کر عمران خان کو ٹارگٹ کیا جارہا ہے۔

اسی لیے عمران خان فرح خان کا دفاع کررہے ہیں، ساڑھے تین سال حکومت کے بعد بھی عمران خان پر کوئی الزام نہیں لگایا جاسکا، اس لیے انہیں ٹارگٹ کرنے کیلئے ان کی اہلیہ کی سہیلی کا نام استعمال کیا جارہا ہے۔ مظہر عباس کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کبھی بھی اداروں کو خودمختار نہیں بنایا گیا اسی لیے سیاسی حکومتوں کے دوران بنائے گئے کیسوں کو سیاسی انتقام کہا جاتا ہے، جب تک اداروں کو سیاست سے دور نہیں رکھا جاتا۔

فر ح خان جیسے کیسوں کو سیاسی انتقام ہی کہا جائے گا۔ دوسرے سوال شیخ رشید کا حکومت پر انتقامی کارروائیوں کا الزام،کیا شیخ رشید کے الزامات درست ہیں؟ کا جواب دیتے ہوئے اطہر کاظمی نے کہا کہ شیخ رشید نے جو بات کی اسی کی کوئی وجہ توہوگی، واقعہ سعودی عرب میں ہوا لیکن مقدمات پاکستان میں درج کیے گئے، حمزہ شہباز کے وزیراعلیٰ بنتے ہی پنجاب پولیس نے پی ٹی آئی قیادت کیخلاف مقدمات درج کرنا شروع کردیئے۔